Mohua Moitra ٹی ایم سی نے مہوا موئترا کو ندیا ضلع کے کرشنا نگر ضلع کا تنظیمی صدر مقرر کیا

author img

By ETV Bharat Urdu Desk

Published : Nov 15, 2023, 12:59 PM IST

ٹی ایم سی نے مہوا موئترا کو ندیا ضلع کے کرشنا نگر ضلع کا تنظیمی صدر مقررکیا

روپے کے عوض سوال پوچھنے کے معاملے میں پارلیمنٹ کی اخلاقیاتی کمیٹی کے ذریعہ کارروائی کا سامنا کررہی ترنمول کانگریس کی ممبر پارلیمنٹ مہو اموئترا سے متعلق پارٹی قیادت کی طویل خاموشی کے بعد ترنمول کانگریس نے ندیا ضلع کے کرشنا نگر ضلع کا تنظیمی صدر مقرر کیا ہے

کولکاتا: مغربی بنگال کی حکمراں جماعت ترنمول کانگریس کی رکن پارلیمان مہوا موئترا نے پارٹی قیادت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ وہ نئی ذمہ داری ہر ممکن نبھانے کی کوشش کریں گی۔ اس سے قبل پارٹی نے کہا تھا کہ مہوا موئترا اپنی لڑائی خود لڑنے کی صلاحیت رکھتی ہیں۔ اپوزیشن جماعتوں کی طرف سے سوالا ت اٹھائے جارہے تھے کہ پارٹی مہوا کے حق میں بیان کیوں نہیں دے رہی ہے۔ کیا ممتابنرجی اور ترنمول کانگریس قبول کرتی ہیں کہ مہوا موئترا قصور وار ہیں۔ اب پارٹی نے مہوا کے حق میں بیان جاری کرنے کے بجائے مہوا کو تنظیمی ذمہ داری دی ہے۔ کہا جارہا ہے کہ پارٹی نے دبے لفظوں میں واضح پیغام دینے کی کوشش کی ہے۔ یہ بھی مانا جارہا ہے کہ اگر مہوا کو اگلے لوک سبھا انتخابات میں سزا کے طور پر کھڑا نہیں ہونے دیا جاتا ہے تو پارٹی انہیں تنظیم میں آگے بڑھائے گی۔ یہ فیصلہ اس کا پیغام بھی ہو سکتا ہے۔

  • Thank you @MamataOfficial and @AITCofficial for appointing me District President of Krishnanagar (Nadia North) .
    Will always work with the party for the people of Krishnanagar.

    — Mahua Moitra (@MahuaMoitra) November 13, 2023 " class="align-text-top noRightClick twitterSection" data=" ">

ترنمول کانگریس نے 2021 کے اسمبلی انتخابات کے بعد اپنا تنظیمی ڈھانچہ تبدیل کر دیا ہے۔ اس وقت سے، حکمران جماعت نے ایک انتظامی ضلع کو متعدد تنظیمی اضلاع میں تقسیم کیا۔ مہوا اس سے پہلے ندیا ضلع کی صدر تھیں۔ لیکن جب ترنمول کانگریس نے ندیا کو کرشن نگر اور رانا گھاٹ کے درمیان تقسیم کیا تو مہوا کو تنظیمی ذمہ داری نہیں دی گئی۔ وہ صرف ایم پی کے طور پر تھیں۔

ترنمول کانگریس کے کرشن نگر تنظیمی ضلع صدر ایم ایل اے کلول خان تھے۔ وہ کافی عرصے سے بیمار ہیں۔ وہ ایک عرصے سے پارٹی کے کاموں میں بھی غیر فعال تھے۔ بتایا جاتا ہے کہ کلول نے اپنے قریبی حلقے میں ضلع صدر کے عہدے سے استعفیٰ دینے کی خواہش بھی ظاہر کی۔ اس نقطہ نظر سے کرشنا نگر میں صدر کی تبدیلی ناگزیر تھی۔ پارلیمنٹ کی اخلاقیات کمیٹی نے مہوا کے خلاف رشوت کے بدلے سوالات سے متعلق شکایت کی جانچ کی ہے۔ کمیٹی نے لوک سبھا اسپیکر اوم برلا کو مہوا کو رکن پارلیمنٹ کے طور پر نااہل قرار دینے کی سفارش بھیجی ہے۔ پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس کے پہلے دن لوک سبھا میں اس پر بحث ہوگی۔ ایم پی مہوا کے مستقبل کا فیصلہ اس کے بعد کیا جائے گا۔ تاہم بہت سے لوگوں کا خیال ہے کہ مہوا کو موجودہ لوک سبھا سے نکال دیا جائے گا۔ اسی وجہ سے مانا جارہا ہے کہ پارٹی نے پیغام دینے کی کوشش کی ہے کہ پارٹی مہوا کے ساتھ ہے۔

یہ بھی پڑھیں: کرناٹک میں امتحانی مراکز میں حجاب پہننے کی اجازت

پارٹی کے آل انڈیا جنرل سکریٹری ابھیشیک بنرجی نے کئی برسوں تک ایسی تبدیلیوں میں اہم کردار ادا کیا۔ اس ردوبدل میں مہوا کے چارج سنبھالنے کے بعد، یہ زیادہ واضح ہے کہ ممتا-ابھیشیک مہوا کی طرف ہیں۔ اسے مہوا کے سیاسی مستقبل کے لیے مثبت سمجھا جا رہا ہے۔ مہوا نے ہمیشہ کہا ہے کہ ممتا اور ابھیشیک ان کے ساتھ ہیں۔ حال ہی میں مہوا کے سوال پر ابھیشیک بنرجی نے کہا کہ آخر مہوا کے خلاف کارروائی میں اتنی تیزی کیوں لائی گئی ہے۔ ابھیشیک نے کہا کہ وہ اپنی جنگ خود لڑ سکتی ہیں۔

ETV Bharat Logo

Copyright © 2024 Ushodaya Enterprises Pvt. Ltd., All Rights Reserved.